اسرائیل کے آئرن ڈوم نے اپنے ہی ڈرون کو مار گرایا۔

اسرائیل کے آئرن ڈوم نے اپنے ہی ڈرون کو مار گرایا۔

اسرائیل کے آئرن ڈوم نے اپنے ہی ڈرون کو مار گرایا۔

آئرن ڈوم اسرائیل کا تیار کردہ ائیر ڈیفنس میزائل سسٹم ہے،جسے چھوٹے راکٹس اور شیلز کو مار گرانے کیلئے ڈیزائن کیا گیا ہے، دنیا اس سسٹم کو ایک کامیاب ائیر ڈیفنس میزائل سسٹم تصور کرتی ہے، حال ہی میں اس سسٹم کے ساتھ دو ایسے واقعات پیش آئے جس کے بعد اس سسٹم پر کی کارکردگی پر سوال اٹھنا شروع ہو گئے ہیں۔

اسرائیل کے شہری علاقوں کو راکٹس سے محفوظ رکھنے میں آئرن ڈوم کا ایک اہم کردار ہے تا ہم حال ہی میں جب اسرائیلی فوج نے فلسطینیوں پر چڑھائی کی تو حماس کی طرف سے سینکڑوں راکٹس اسرائیل پر داغے گئے ، اس دوران اس سسٹم نے ان راکٹوں کو انٹرسیپٹ کرتے ہوئے اپنے ایک سرویلنس ڈرون کو بھی مار گرایا، سکائیلارک نامی سرویلنس ڈرون ہے۔ سکائی لارک کو ایلبٹ سسٹمز نے تیار کیا ہے۔

اس سسٹم کے ساتھ دوسرا وقعہ اس وقت پیش آیا جب حماس نے اشکلون شہر پر اپنے راکٹس داغے، آئیرن ڈوم انھیں مار گرانے میں ناکام رہا، تفصیلات کے مطابق آئیرن ڈوم کی بیٹری میں خرابی کی وجہ سے یہ راکٹس اشکلون شہر پر گرنے میں کامیاب ہوئے۔ تاہم اسرائیل کی جانب سے کہا جا رہا ہے کہ اس تکنیکی خرابی کو دور کر دیا گیا ہے اور اب یہ بیٹری مکمل طور پر چل رہی ہے۔

اسرائیلی ڈیفنس فورسز نے دعویٰ کیا ہے کہ آئرن ڈوم اسرائیل کی طرف فائر کئے گئے 90 فیصد راکٹوں کو روکنے میں کامیاب رہا۔

یاد رہے حماس کی طرف سے داغے جانے والے راکٹ دیسی ساختہ ہیں جو کہ انتہائی پرانی ٹیکنالوجی کے حامل ہیں اور آئرن ڈوم جیسا ائیر ڈیفنس میزائل سسٹم ان دیسی ساختہ راکٹوں کو مار گرانے میں بھی 100 فیصد کامیاب نہیں ہے، بہرحال اسرائیلیوں کا نظام زندگی اسی ائیر ڈیفنس میزائل سسٹم کے بھروسے چل رہا ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *