Home / Pakistan Army / آئی ایس آئی اور نواز شریف – کون کیا کر رہا ہے؟

آئی ایس آئی اور نواز شریف – کون کیا کر رہا ہے؟

پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی نے روس کے اندر جائے بغیر روس کے ٹکڑے کر دیئے۔ امریکہ 52 ملکوں کا اتحاد ایک لاکھ 92 ہزار اتحادی افواج لے کر پاکستان کو برباد کرنے افغانستان پہنچا۔

پاکستان کے ایٹمی پاور ہونے اور خطرناک نتائج نکلنے کی وجہ سے ڈائریکٹ پاکستان کو ٹارگٹ نہ کر سکا اور اس کام کے لئے اس نے آس پاس کمزور ملک افغانستان کا انتخاب کیا۔ اس وقت مجاھدین کو لوگ پاگل کہتے تھے کہ اتنی بڑی پاور کے سامنے تم کیا چیز ہو لیکن ان کو اپنے اللہ پر یقین تھا۔ امریکہ کو ویت نام سے بھی مہنگی یہ جنگ پڑی اور اتحادی بھی بھاگ گے ۔ ہزاروں فوجی بھی مروائے اور امریکہ لاکھوں ٹریلین ڈالرز کا مقروض بھی ہو گیا۔

اور اب افغانستان میں بیٹھ کر انڈیا اور اسرائیل کے ساتھ مل کر 35 دہشت گردی کے کیمپ بنا کر پاکستان میں دھماکے کروا کر کمزور کرنے کی کوشش کی لیکن پاکستان کی آرمی اور بہادر عوام نے مل کر آپریشن ردالفسا ،آپریشن ضرب عضب، آپریشن راہ نجات اور آپریشن خیبر فور کے زریعے دہشت گردوں کو شکست دی اور دنیا کی 10 بڑی خفیہ ایجنسیوں کو شکست دی۔

جب کوئی چال کامیاب نہ ہوئی تو امریکہ نے پاکستان میں غدار حکمرانوں کے زریعے ملک کو کمزور کیا۔ قرضوں کے دلدل میں پھنسایا، ملک میں فری تعلیم کے نام پر پاکستان کے نظریہ پاکستان کو تبدیل کرنے کی کوششیں کی گئیں۔اس مقصد کے لئے باہر کی این جی اوز کے زریعے کروڑوں ڈالرز پاکستان کی نواز حکومت کو دئیے گے۔ اور نواز حکومت نے ملک میں پاکستان کو لبرل بنانے کی پوری کوشش کی۔ عوام سے جھوٹ بھی بولتے رہے۔

ہم نے فری تعلیم دی جبکہ یہ پیسہ باہر سے آیا۔اور ملکی بجٹ میں تعلیم کے نام پر اربوں کھائے ۔ لیکن قوم کو سچ کون بتائے۔ کیوں کہ ملاء جس نے قوم کی رہنمائی کرنی ہوتی اور حکومت میں تھے سب نے پاکستان کو مزہبی ووٹ لے کر اور مل کر کمزور کیا۔ جیو پر ایک مہم لانچ کی گئی پاکستان کا مطلب کیا پڑھنے لکھنے کے سواء نظریہ پاکستان تبدیل کرنے کے لیے جیو چینل کو 2 ارب ڈالر دیئے گے۔

تب پیمرا سویا رہا کیونکہ حکومت نواز شریف کی تھی۔ اور جب پاکستان کے قومی سلامتی کے اداروں نے نواز شریف حکومت کو ایسا کرنے سے ہر بار منع کیا تو نواز شریف اور اسکی بیٹی نے کرائے کے ٹٹووں کا استعمال کرتے ہوئے سوشل میڈیا پر فوج کے خلاف مہم چلانا شروع کر دی، یہ سب کیسے کیسے ہوتا رہا یقیناً آپ جانتے ہوں گے.جب آپ اور میرے جیسے لوگوں نے ان فوج مخالف لوگوں کو جواب دینا شروع کر دیا تو نواز شریف کی بیٹی نے پرویز رشید کے ساتھ مل کر فوج پر پرنٹ میڈیا کے ذریعے خطرناک نوعیت کے الزامات لگائے، جسے ڈان لیکس کا نام دیا گیا۔

کشمیر کی تحریک آزادی برہان وانی کی شہادت کے بعد عروج پر تھی۔ مودی حکومت نے ساری حریت قیادت کو جیل میں ڈال دیا۔اور ادھر مودی کے دوست نواز شریف کو پیغام دیا۔ تم بھی حافظ سعید کی جماعت کو ٹوٹلی ختم کر دو۔ نواز شریف نے 10 مہینے کے لیے انھیں نظربند کر دیا۔ جماعت کے فلاحی ادارے fif پر پابندی لگا دی۔ اور جب عدالتوں نے عدم ثبوت پر کام کرنے کی اجازت دی تو اقوام متحدہ کا آرڈیننس لے آیا۔

یہ سب ملک دشمنوں کے کہنے پر کیا جا رہا ہے۔ میرے رب نے اس پاکستان کی حفاظت کرنی ہے۔ اور میرے رب نے پاکستان کے دشمنوں کو پوری دنیا کے سامنے زلیل کر دیا۔ یہ سب سے بڑی دلیل ہے۔ جو بھی آج تک پاکستان کی سالمیت کے خلاف گیا۔ میرے رب نے عبرت کا نشان بنا دیا۔ یاد رہے ٹیپو سلطان کو بھی میر جعفر اور میر صادق کے زریعے شہید کروایا گیا ۔

ٹیپو سلطان بھی اس دور کے فرعون انگریزوں کو عبرت ناک شکست دی تھی اور آج بھی میرے پاکستان کے گمنام مجاھدین نے دور حاضر کے فرعونوں، دشمن ایجنسیوں کو عبرت کا نشان بنا دیا۔ اور دشمن اب غداروں کو استعمال کر رہا ہے۔ پاکستان کے غداروں سے پھر کہہ دیتا ہوں، پیسوں کی خاطر مت بکو۔ پاکستان کو اگر ختم کیا جا سکتا تو امریکہ ابھی تک کر چکا ہوتا۔بھارت بھی ہم پر چڑھ دوڑتا۔ اس لیے سمجھ جاو۔ یہ نا ہو کہ دیر ہو جائے۔ اور تمھارا کوئی نام لیوا بھی نا رہے۔

About yasir

Check Also

کیا واقعی جنرل ضیاء الحق امریکی آلہ کار تھے؟

پاکستان میں آج بھی ایسے لوگوں کی کمی نہیں جو جنرل ضیاء الحق کو امریکی …