Home / International / سعودی پرنس نے سعودی عرب کو کس تباہی کی طرف دھکیل دیا

سعودی پرنس نے سعودی عرب کو کس تباہی کی طرف دھکیل دیا

سعودی عرب کا یہ ولی عہد جس کا نام محمد بن سلمان ہے, یوں لگتا ہے مغرب سے بہت متاثر ہے, اس ولی عہد نے سعودی عرب میں وہ وہ کام کرنے کی اجازت دے دی ہے جس کی سعودی قانون میں گنجائش نہیں ہے.

سعودی عرب میں بے نمازیوں کی کوئی گنجائش نہیں, وہاں ہر انسان نماز پڑھنے کا پابند ہے, قتل ،بے حیائی، چوری یہ 3 گناہ کبیرہ اس پاک دھرتی پر نہ ہونے کے برابر رہے ہیں۔ دنیا بھر کے مسلمانوں کی سعودی عرب سے محبّت کی وجہ مکہ اور مدینہ ہیں. لیکن نئے سعودی پرنس نے دنیا کے تمام مسلمانوں کو مایوس کر دیا ہے, اس ولی عہد نے نہ صرف اپنی زبان سے بلکہ اپنے کارناموں سے مسلمانوں کی دل آزاری کی.

سعودی عرب میں 3 کام جو کبھی نہیں ہوئے وہ اس ولی عہد نے کر دیئے۔

پہلا = سعودی عرب میں سینما گھروں کی اجازت اسی نے دی۔اب وہاں کے لوگ اپنے خاندان کے ساتھ مل بیٹھ کر ہالی ووڈ کی فلمیں دیکھ سکتے ہیں۔

دوسرا = اب سعودی عرب میں میوزک کنسرٹ بھی ہونگے, جسکی شروعات کر دی گئی ہے، یعنی گانے بجانے کی شروعات کر دی گئی ہے. اور بہت جلد اب اس کے نتائج پوری دنیا دیکھے گی.

تیسرا = مغربی ممالک سے آئی عورتیں بکنی پہن کر سعودی عرب کے بیچ پر گھوم سکتی ہیں۔ یعنی اس پاک دھرتی پر ایسے غلیظ کام بھی ہونگے، اور وہاں سعودی عرب کا قانون لاگو نہیں ہوگا.

اتنا کم عمر اور نا سمجھ ولی عہد خاص مقاصد کے لیے چنا گیا ہے۔ جسے اس بات کا اندازہ نہیں کہ اصل میں فلسطینیوں کو اپنی سرزمین کا حق ہے نہ کہ اسرائیل کو. موصوف نے حال ہی میں اسرائیل کے حق میں بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائیل کو اپنی سرزمین کا حق ہے.

ایک اندازے کے مطابق اس کم عمر ولی عہد کو اقتدار دلوانے میں امریکہ کا اہم کردار ہے. یقینا امریکہ نے سعودی عرب کو یہ لالچ دیا ہوگا کہ وہ سعودی عرب کو ایران کے مقابلے میں مضبوط کرے گا, اس کے علاوہ امریکہ کے ہی کہنے پر اس شہزادے کا جھکاؤ زیادہ تر اسرائیل کی طرف ہے, کیونکہ اسرائیل بھی ایران کا دشمن ہے, اس لیے سعودی عرب اور اسرائیل کو ایران کے خلاف متحد کرنے کیلئے امریکا سر توڑ کوشش کر رہا ہے.

آپ بحیثیت مسلمان سوچیں کہ  سعودی عرب کو امریکہ ایئر ڈیفنس میزائل سسٹم دیتا ہے اور یہ تسلی دیتا ہے کہ اگر سعودی عرب کی کسی ملک سے جنگ ہوتی ہے تو جوابی حملے میں سعودی عرب کے اہم مقامات محفوظ رہیں گے, لیکن سعودی عرب اگر ایران کے ساتھ جنگ چھیڑتا ہے تو کیا گارنٹی ہے ایران کا ایک بھی میزائل ان مقدس مقامات پر نہیں کرے گا.

اب آپ کے ذہن میں یہ سوال ضرور آیا ہو گا کہ کیا امریکہ اور اسرائیل سعودی عرب کے ساتھ ڈبل گیم کھیل رہے ہیں؟ یعنی ایک طرف ایران کے ہاتھوں مسلمانوں کے قبلے کو نقصان پہنچانا چاہتے ہیں؟ اور دوسری طرف اس کے نتیجے میں مسلمان آپس میں لڑ پڑیں گے، ظاہر ہے اگر ایران کی وجہ سے مسلمانوں کے کسی مقدس مقام کو نقصان پہنچتا ہے تو شیعہ سنی کی جنگ چھڑ جائے گی, اور اس کی لپیٹ میں ہر مسلمان ملک آ جائے گا. کیا یہود و نصار یہی نہیں چاہتے؟

مگر یہ بات ان بدوؤں کو کون سمجھائے, جو مسلمانوں کے قبلے والے ملک کے حکمران بنے ہوئے ہیں مگر ان کا جھکاؤ یہودیوں کی طرف ہے. ایک طرف عرب امارات کے بدو اپنی سرزمین پر بھارت کو مندر بنا بنا کر دے رہے ہیں, اور دوسری طرف سعودی عرب کے بدو یہودیوں کی طرفداری میں لگے ہوئے ہیں, اور ان کی غلاظت اپنی پاک دھرتی پر لانے پر تلے ہوئے ہیں.

ان سارے معاملات کو دیکھتے ہوئے پاکستان اہم کردار ادا کرتا آیا ہے, اور اس وقت بھی پاکستان کو ضرورت ہے کہ ان معاملات کو سلجھائے, ہمیں ان معاملات کو سمجھنے میں زیادہ پیچیدگی کا سامنا نہیں ہے, کیونکہ احادیث ہمارے سامنے ہیں اور ان میں لکھی ہوئی ایک ایک بات ہو کر رہے گی.

Share This

About yasir

Check Also

پاکستان سعودی عرب کی سلامتی کی خاطر کیا کچھ کرسکتا ہے۔

پاکستان میں عسکری اور سیاسی قیادت اس بات پر متفق ہیں کہ یمن میں جو …