Home / International / بھارتی فوجی آفیسرز افغانی افوج کو کنٹرول کرنے لگے

بھارتی فوجی آفیسرز افغانی افوج کو کنٹرول کرنے لگے

اس آرٹیکل کا عنوان ہے دی ڈرٹی ٹرکس آف انڈیا،
بھارتی فوج افغانستان میں اپنا اثرو رسوخ بڑھا رہی ہے, جو کہ پاکستان کے لئے بے حد خطرناک ثابت ہو سکتا ہے.

ایک طرف بھارتی فوج دہشت گردوں کی ٹریننگ کرکے وقتاً فوقتاً پاکستان بھیجتی ہے, اور دوسری طرف افغانستان کی فوج کو پاکستان کی فوج کے مقابلے میں تیار کر رہی ہے, یہاں تک کہ افغانی فی میل فوجیوں کو بھی بھارتی فوج جنگی تربیت دینے میں مشغول ہے.

بھارتی فوج کے ان سارے اقدامات پر اگر نظر ڈالی جائے تو یہی لگتا ہے کہ بھارتی فوج افغانستان کی فوج اور دہشت گردوں سے مل کر پاکستان پر دونوں اطراف سے حملہ کرنا چاہتی ہے, اس ساری صورت حال کو دیکھتے ہوئے بزرگوں کی یہ پیش گوئی سچ ثابت ہوتی نظر آتی ہے کہ ایک جنگ میں پاکستان اٹک تک کا علاقہ کھو دے گا, یعنی وہ حملہ جو افغانستان کی طرف سے کیا جائے گا پاکستان آرمی کی غیر موجودگی میں بھارتی فوج سے تربیت یافتہ افغانی فوج اور دہشت گرد باآسانی اٹک تک کے علاقے پر قابض ہو جائیں گے.

ظاہر سی بات ہے پاکستان اور انڈیا کی جنگ میں پاکستان کی ساری فوج فوری طور پر پاکستان اور انڈیا کے باڈر پر چلی جائے گی, جبکہ پاک افغان باڈر پوری طرح سے خالی ہو جائے گا, اور یہی موقع دیکھتے ہوئے افغانستان نمک حرامی کر جائے گا۔

بھارتی فوج نہ صرف افغانیوں کو ٹریننگ دے رہی ہے بلکہ مالی و دفاعی امداد بھی دے رہی ہے, حال ہی میں بھارت کی طرف سے افغانستان کو 4 جنگی ہیلی کپٹر دینے کا اعلان کیا گیا, جنہیں پاک افغان بارڈر پر تعینات کیا جائے گا, یہ تعیناتی دہشت گردوں کو مارنے کے لیے نہیں بلکہ پاکستان کی افواج کے لیے کی جا رہی ہے.

حالانکہ پاکستان آرمی چیف نے کئی بار افغانستان سے تعاون کی اپیل کی, کیوں کہ افغانستان کے تعاون کے بغیر پاکستان میں دہشت گردی کا خاتمہ ممکن نہیں, مگر افغانستان بجائے اس کے کہ پاکستان کی افواج سے تعاون کرے بھارتی فوج سے تعلقات بڑھا رہا ہے جو کہ اس خطے میں دہشتگردی کو بڑھانے میں اہم کردار ادا کرنے میں لگا ہوا ہے۔

افغانستان ایک لالچی ملک ہے, جب تک پاکستان افغانستان کو مالی و فوجی مدد دیتا رہا، اور افغانیوں کو پاکستان میں پناہ ملتی رہی، افغانستان پاکستان کے تلوے چاٹتا رہا، مگر اب جب پاکستان کو افغانستان کے ساتھ کی ضرورت پڑی تو نہ صرف افغانستان نے پاکستان کا ساتھ چھوڑا بلکہ پاکستان کے دیرینہ دشمن کا ہاتھ تھام لیا, پاکستان کے دشمن کے ساتھ مل کر ایک طرف پاکستان میں دہشت گردی کی گئی اور دوسری طرف سوشل میڈیا پر نقلی پشتون بن کر پاکستان میں فساد کی ایک نئی لہر کو پیدا کرنے میں اہم کردار ادا کیا.

اس کے علاوہ بھارتی فوج وہ گولابارود جو ایل او سی پر استعمال نہیں کر سکتی کیونکہ جواب میں پاکستان کی آرمی جو ہتھیار استعمال کرتی ہے اس سے بھارتی فوج کا بہت نقصان ہوتا ہے, وہ ہتھیار اور گولہ بارود افغانستان کی افواج اور اپنے تربیت یافتہ دہشتگردوں کو دے رہی ہے, تاکہ وہ گولہ بارود افغانستان کی طرف سے پاکستان کی افواج پر استعمال کیا جا سکے.

Share This

About yasir

Check Also

نریندر مودی’ ٹرمپ اور مسلمان

ایک طرف امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے امریکہ میں مسلمانوں کی آمد کو بند اور …