Home / Pakistan Army / بھارت کا پاکستانی عوام کو چین اور سعودی عرب کےخلاف بھڑکانے کا خوفناک پروپیگنڈا

بھارت کا پاکستانی عوام کو چین اور سعودی عرب کےخلاف بھڑکانے کا خوفناک پروپیگنڈا

تعارف: پاکستان میں فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی گرے لسٹ میں شامل کی جانے کے حوالے سے متعلق ابہام پایا جاتا ہے، ایف اے ٹی ایف اقوام متحدہ کا بین الحکومتی ادارہ ہے، جو 1989 میں قائم کیا گیا تھا اور اس کا مقصد کٹنگ اور منی لانڈرنگ کو روکنا تھا.
fatf

صورتحال: ایک طرف بھارتی میڈیا اور دوسری طرف پاکستانی میڈیا کے کچھ چینلز نے پھرتی دکھاتے ہوئے ایسی خبریں پھیلانا شروع کر دیں گے پاکستان کے دوستوں نے پاکستان کا ساتھ چھوڑ دیا ہے، جس سے امریکی اقدام “دہشت گردی کے خلاف اقدام نہ کرنے پر جون سے پاکستان پر مالیاتی پابندی عائد ہو جائیں گی” کیلئے راہ ہموار ہو گئی ہے۔

لیکن دوسری طرف پاکستان کے دفتر خارجہ کی طرف سے گزشتہ روز ان خبروں کی تردید کی گئی ہے، تاہم وزیر داخلہ احسن اقبال نے جمعہ کی سہ پہر ایک ٹویٹ میں صرف ترکی کا شکریہ ادا کیا ہے، جس کے بعد ان خبروں کی اہمیت اجاگر ہوئی، کہ پاکستان کو اس کے دوستوں چین اور سعودی عرب نے تنہا چھوڑ دیا ہے۔
ahsan iqbal

حقائق: یہاں میں آپ کو بتانا ضروری سمجھتا ہوں کہ چین اور سعودی عرب دو ایسے ممالک ہیں جن کے لیے پابندیوں سے آزاد پاکستان بہت ضروری ہے، ایک طرف پاکستان چین کی شہ رگ بن چکا ہے کیونکہ سی پیک منصوبے کے تحت چین مڈل ایسٹ تک رسائی حاصل کر سکتا ہے، اور ایسا اسی صورت ہو سکتا ہے جب چین اور پاکستان میں اعتماد کا رشتہ قائم رہے گا، جو کہ کئی سالوں سے قائم ہے اور دن بدن اس اعتماد میں مضبوطی آرہی ہے۔

بھارت ایک ایسا ملک ہے جو کبھی نہیں چاہے گا کہ پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات بہتر رہیں، بھارت پاک چین تعلقات میں خلل ڈالنے کے لیے لمبی چوڑی انویسٹمنٹ بھی کرچکا ہے، ایک طرف بھارتی میڈیا کے ذریعے پروپیگنڈا کیا جارہا ہے کہ چین پاکستان پر قبضہ کر لے گا یا پھر پاکستان چین کی کالونی بن جائے گا، اور دوسری طرف بلوچستان میں گوادر منصوبے کو روکنے کے لیے بھارت نے بلوچستان میں موجود کچھ لوگوں کو برین واش کرنے کے لیے بھاری فنڈنگ کر رکھی تھی۔
India Funding In Baluchistan

بھارت کا بلوچستان کے لوگوں کو ورغلانے کا مقصد یہ تھا کہ دنیا کو یہ تاثر دیا جائے گے بلوچستان میں رہنے والے لوگ پاکستان سے نفرت کرتے ہیں، اس ساری صورت حال کو دیکھتے ہوئے چین اور پاکستان نے ایک شاندار منصوبہ بنایا اور ان لوگوں سے مذاکرات کیے اور قومی دھارے میں شامل ہونے کی دعوت دی، اور یہ یقین بھی دلایا کہ آپ لوگوں کا مستقبل پاکستان کے ساتھ ہے، جب کہ چین کی طرف سے انہیں مالی مدد بھی کی گئی، تاکہ وہ بھارتی چنگل سے نکل سکیں۔

لہذا اب بھارتی میڈیا کا استعمال کیا جارہا ہے، اور دنیا کو یہ بتانے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ پاکستان کے دو قریبی ساتھیوں نے چھوڑ دیا، اب آتے ہیں سعودی عرب کی طرف،
پاکستان اور سعودی عرب کا رشتہ نہ ٹوٹنے والا ہے، سعودی عرب ہی جانتا ہے کہ اس کی سلامتی پاکستان کی سلامتی سے ہے۔

پاکستانی فوج کعبہ سمیت تمام مقدس مقامات کی حفاظت کی ضامن ہے، پاکستان نے جب ایٹمی دھماکے کئے تو سعودی عرب میں عید کا سماں تھا،سعودی حکام یہ جانتے ہیں کہ اسرائیل سعودی عرب میں موجود مقدس مقامات کو نقصان پہنچانے کے لیے ہمہ وقت تیار ہے، مگر اسرائیل کے اس ناپاک منصوبے کے آگے نہ صرف پاکستان کی تینوں افواج کھڑی ہیں،بلکہ پاکستانی عوام اپنی فوج کے ہمراہ ان مقدس مقامات کی حفاظت کے لیے ہر حد تک جانے کے لیے تیار ہیں، تو بھلا یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ سعودی عرب جیسا ملک ہمارے خلاف ہو۔
pakistan saudi arabia relations

بھارتی میڈیا کا سعودی عرب اور پاکستان کے متعلق ایسا ابہام پیدا کرنے کی کوشش کی گئی کہ سعودی عرب نے بھی پاکستان کا ساتھ چھوڑ دیا، بھارت اپنے میڈیا کو استعمال کرتے ہوئے ایسی خبریں اس لیئے پھیلا رہا ہے تاکہ پاکستان میں شیعہ سنی فسادات شروع ہوں، یہ فسادات کیسے شروع ہوسکتے تھے، اس بارے میں نہیں لکھوں گا۔

دوسری طرف ہماری اپنی کوتاہیاں بھی اس بات کو تقویت دیتی ہے دشمن بآسانی پروپیگنڈہ کر سکتا ہے، وزیر داخلہ کا ایسا ٹویٹ جس میں صرف ایک دوست کا نام لے کر شکریہ ادا کیا گیا، پاکستانی عوام کو گمراہ کرنے اور بھارتی خبروں پر یقین کرنے دلانے کے لیے کافی تھا، ہمیں ہمہ وقت دشمن کی چالوں سے باخبر رہنا ہوگا، پاکستان زندہ باد۔۔۔
pakistani Force

Share This

About yasir

Check Also

پاک فوج کے آفیسرز کو تربیت نہ دینے پر امریکہ کو کیا نقصانات اٹھانا پڑینگے

امریکا کی طرف سے پاکستانی فوج کی ملٹری ٹریننگ پروگرام کی فنڈنگ کم کرنے پر …