Home / International / کشمیری مجاہدین کے ہاتھوں بھارتی فوج کا بڑا نقصان

کشمیری مجاہدین کے ہاتھوں بھارتی فوج کا بڑا نقصان

 جموں سنجواں بریگیڈ کاروائی کی تازہ صورتحال

اب تک دو صوبیدار اور ایک میجر سمیت 13انڈین فوجی ہلاک ہو چکے ہیں۔ مجاہدین کشمیر کی جانب سے انڈین فوجی فیملیز کو محفوظ راستہ دے دیا گیا ہے, جس کی وجہ سے انڈین فوج کی فیملیز محفوظ مقام پر منتقل ہوگئی ہیں۔

جس کے بعد مجاہدین نے ایک بار پھر کاروائی شروع کر دی اور 36 بریگیڈ پر مجاہدین کی صبح 4 بجے شروع کی گئی یلغار 12گھنٹے گزرنے کے بعد بھی پوری آب وتاب سے جاری ہے.

انڈین فوجی کیمپ پر پوری طرح سے مجاہدین کا قبضہ برقرار ہے. متعدد انڈین آفیسرز ابھی بھی کمروں میں پھنسے ہوئے ہیں,جن کی اولین ترجیح وہاں سے جان بچا کر بھاگ نکلنا ہے۔

چند مجاہد نے مد مقابل ہزاروں مشرک بزدل فوج کو جو کہ جدید اسلحہ و ٹینک و ہیلی کاپٹروں سے بھی لیس ہے دھول چاٹنے پر مجبور کر رکھا ہے۔

یاد رہے 2016 میں سری نگر میں مجاہدین نے ایک عمارت میں خود کو محصور کرلیا تھا اور اس عمارت کی کھڑکیوں سے فائرنگ کرکے بھارتی فوج کو نشانہ بنایا جارہا تھا، بھارتی فوج کی بزدلی کی انتہا یہ تھی کہ سینکڑوں فوجی اس عمارت کے اردگرد مورچہ بندی کرکے اس انتظار میں بیٹھے تھے کہ جب مجاہدین کی رائفلوں سے گولیاں ختم ہوں گی تو پھر عمارت میں داخل ہو کر انہیں شہید کیا جائے گا۔

کافی وقت گزرنے کے بعد جب بات انٹرنیشنل میڈیا تک پہنچی تو بھارت کو بالآخر یہ ترکیب سوجھی کہ کیوں نا بھارتی کمانڈوز کو عمارت کے اندر بھیجا جائے، لہذا کچھ ہی دیر میں بھارتی کمانڈوز کو بلالیا گیا، بھارتی کمانڈوز نے صورت حال کا جائزہ لیتے ہوئے اس عمارت کے نزدیک جانے سے بھی انکار کردیا۔

جس کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا کہ پوری عمارت کو ہی دھماکہ خیز مواد سے تباہ کردیا جائے، یوں بھارتی فوج نے پوری عمارت پر راکٹ لانچروں کی بارش کر دی اور عمارت کو تباہ کر دیا گیا۔ یہاں سے اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ بھارتی فوج کس قدر بزدل اور نکمی ہے۔
indian army latest

Share This

About yasir

Check Also

پاکستان سعودی عرب کی سلامتی کی خاطر کیا کچھ کرسکتا ہے۔

پاکستان میں عسکری اور سیاسی قیادت اس بات پر متفق ہیں کہ یمن میں جو …