Home / International / مسلم ممالک کیسے مغرب کی غلامی سے نجات حاصل کر سکتے ہیں

مسلم ممالک کیسے مغرب کی غلامی سے نجات حاصل کر سکتے ہیں

دنیا میں اس وقت تقریبا 50 مسلمان ممالک ہیں اور افسوس کی بات یہ ہے کہ یہ سبھی ممالک امریکہ اور اس کے اتحادیوں کے محتاج ہیں، ان سب ممالک میں بالواسطہ یا بلاواسطہ امریکی پالیسی چلتی ہے، اور دوسری افسوسناک بات یہ ہے کہ تمام مسلمان ممالک ایک دوسرے کے سخت خلاف ہیں یا پھر آپس کے تعلقات بہتر نہیں ہیں جبکہ دوسری طرف غیر مسلم ممالک آپس کے اختلافات مل بیٹھ کر طے کر لیتے ہیں۔

امریکہ اور باقی مغربی ممالک کبھی یہ نہیں چاہتے کہ مسلمانوں کے درمیان اتحاد ہو، اور اگر ایسا ہوگیا تو امریکہ سے اسلحہ کون خریدے گا؟ کیوں کہ مغرب میں موجود ہر غیر مسلم ملک اپنا اسلحہ خود تیار کرتا ہے اور دوسرے ممالک پر کم سے کم انحصار کرتا ہے۔

اگر دیکھا جائے تو امریکہ سب سے زیادہ اسلحہ مسلمان ممالک کو ہی مہنگے داموں فروخت کررہا ہے، ایران اور سعودی عرب میں اختلافات پیدا کرکے سعودی عرب کو اربوں ڈالر کا پرانا اسلحہ بیچا گیا، قطر کے خلاف سعودی حکومت کو کئی اقدامات اٹھانے کے لیے امریکہ کا دباؤ ہے، ادھر پاکستان اور افغانستان کے درمیان بہتر تعلقات کا فقدان ہے جس کی سب سے بڑی وجہ امریکہ ہی ہے۔

امریکا ہر مسلمان ملک پر اپنا حکم اور قانون مسلط کرتا آیا ہے، اور جن ممالک نے امریکہ کا حکم ماننے سے انکار کیا ان ممالک کا نقشہ ہی بدل دیا گیا، جس کی زندہ مثال عراق، لیبیا اور شام ہیں، امریکہ نہ صرف ایک بدمعاش ملک ہے بلکہ ایک لٹیرا بھی ہے، امریکہ نے عراق اور لیبیا میں جنگی کاروائیاں کیں اور ہزاروں ٹن سونا اور تیل چرایا۔
US army stealing gold

یہ ممالک مسلم دنیا کے سب سے زیادہ امیر ممالک ہوا کرتے تھے، صرف لیبیا ہی اس قدر امیر ملک تھا کہ اپنی کرنسی سونے کے سکوں کی صورت میں بنانا چاہتا تھا, اور اگر ایسا ہو جاتا تو پوری دنیا میں اس کرنسی کا راج ہوتا اور ڈالر کی قدر افغانی کرنسی جیسی ہوجاتی، مگر امریکا ایسا کیسے ہونے دے سکتا تھا  لہذا ڈالر کو بچالیا گیا اور اس امریکی اقدام میں بھی امریکہ کو مسلمان ممالک کی حمایت حاصل تھی۔
Libia Gold CurrencyLibia Golden Currency

مسلمان ممالک کو لوٹنے کے بعد ادھر امریکہ نے حال ہی میں اعلان کیا ہے کہ وہ بہت جلد افغانستان سے قیمتی پتھروں کو نکالنے کا کام شروع کر دے گا، یعنی امریکہ کی صرف ایک ہی پالیسی ہے اور وہ یہ کہ وہی اقدام اٹھائے جاتے ہیں جن سے صرف اور صرف امریکہ کا فائدہ ہو۔ افغانستان میں موجود اربوں ڈالر کی قیمتی معدنیات پر امریکہ نظریں جمائے بیٹھا ہے اور بہت جلد افغانستان اس بیش بہا قیمتی معدنیات سے ہاتھ دھو بیٹھے گا۔
Gemstones In Afghanistan

اگر مسلمان ممالک ہر شعبے میں ایک دوسرے سے تعاون کریں تو با آسانی نہ صرف اس محتاجی کی زندگی سے نکل جائیں گے امریکہ اور اس کے اتحادیوں کو اپنا محتاج بنا دیں گے اور ایسا کیسے ہو سکتا ہے؟

اس وقت 41 مسلمان ممالک کا فوجی اتحاد ہوچکا ہے، اس کی سربراہی پاکستان کے ریٹائرڈ جنرل، جنرل راحیل شریف کر رہے ہیں، اس 41 مسلمان ممالک کے فوجی اتحاد کو پاکستان چلائے گا، اور پاکستان کے پاس یہ سنہری موقع ہے کہ وہ ان تمام مسلمان ممالک کو اس بات پر متفق کرے کہ یہ تمام ممالک مل کر ڈیفنس انڈسٹریز قائم کریں، جن سے نہ صرف مسلمان ممالک اپنی دفاعی ضروریات کو پورا کریں گے بلکہ اپنے ہتھیار دوسرے ممالک کو فروخت کرکے بھاری زرمبادلہ بھی کما سکیں گے۔
Pakistan Next Gen Fighter

پاکستان ایران اور ترکی اس وقت بہترین ہتھیار بنانے کی صلاحیت رکھتے ہیں جبکہ صرف ایران اور سعودی عرب ہی کے پاس اتنا تیل موجود ہے کہ وہ پوری دنیا کو تیل مہیا کر سکتے ہیں، ان مسلمان ممالک کے پاس بہترین سائنس دان اور انجینئرز موجود ہیں جو کہ امریکی اسلحہ سے بہتر اسلحہ بنا سکتے ہیں، کچھ شعبوں میں پاکستان بہت پیچھے ہے جس کی سب سے بڑی وجہ پاکستان کی معیشت ہے، اگر معاشی طور پر پاکستان مضبوط ہوجائے تو دنیا کا کوئی بھی
ہتھیار ایسا نہیں جو پاکستان نہ بنا سکے۔

اس کے علاوہ تمام مسلم ممالک کو ایک دوسرے سے تجارت کرنے کی ضرورت ہے ۔ اس اقدام سے سب سے بڑا فائدہ یہ ہے کہ کم از کم مسلمان ممالک اس قابل ہو جائیں گے کہ وہ سودی نظام کو ختم کر سکیں گے ۔ صرف یہی اقدام اٹھانے سے مغربی ممالک مسلم ممالک کے محتاج ہو کر رہ جائیں گے , کیوں کہ ان ممالک کا سارا نظام ہی سود پر قائم ہے۔

Share This

About yasir

Check Also

پاکستان سعودی عرب کی سلامتی کی خاطر کیا کچھ کرسکتا ہے۔

پاکستان میں عسکری اور سیاسی قیادت اس بات پر متفق ہیں کہ یمن میں جو …