Home / Missile Test / پاکستانی سائنسدان “ٹینس بال” جتنا ایٹمی ہتھیار بنانے میں کامیاب

پاکستانی سائنسدان “ٹینس بال” جتنا ایٹمی ہتھیار بنانے میں کامیاب

پاکستان کے پاس چھوٹے ایٹمی ہتھیار بھی موجود ہیں یہ بات جنرل مشرف کے دور حکومت میں امریکیوں کو پتا چل چکی تھی۔

اصل میں جنرل مشرف حالات کے پیش نظر دنیا کو بتا دینا چاہتے تھے کہ ہمارے پاس نا صرف بڑے ایٹمی ہتھیار موجود ہیں بلکہ پاکستانی سائنسدانوں نے ایسے چھوٹے ایٹمی ہتھیار بھی بنا لیے ہیں جو کہ بریف کیس جتنے ہیں یا پھر ٹینس بال جتنے۔

ان ٹیکٹیکل نیوکلیئر ہتھیاروں کو کمانڈوز کے ذریعے دشمن ملک میں منتقل کرنا بہت آسان ہوتا ہے، “اور ایسا اس وقت کیا جاتا ہے” جب دشمن آپ سے زیادہ طاقتور ہو یا پھر آپ کے ہتھیاروں کی پہنچ سے باہر ہو یا پھر آپ مکمل طور پر جنگ ہار چکے ہوں، مثلاً دشمن آپ کے ملک پر ایٹمی حملہ کرنے میں پہل کر چکا ہو، اس کے بعد سپیشل فورسز زیر زمین زخیرہ کیے گئے ان ٹیکٹیکل ہتھیاروں کو دشمن میں گھس کر اس کے قیمتی اثاثے تباہ کر سکتی ہیں۔
Pakistan Nuclear Weapons

یہی وجہ ہے کہ پاکستان دنیا کی نظر میں کمزور ملک ہونے کے باوجود اپنے دشمنوں کے لئے زبردست خطرہ ہے،اب وہی دشمن پاکستان پر حملہ کر سکتا ہے جسے اپنی سلامتی عزیز نہیں ہوگی۔

دنیا کے وہ تمام ممالک جنہوں نے ایٹمی ہتھیار بنا لیے ہیں ٹیکٹیکل نیوکلیئر ہتھیار بھی بناتے ہیں مگر کبھی ظاہر نہیں کرتے، مگر پاکستان کا ظاہر کرنا پاکستان کے اپنے مفاد میں ہے، تاکہ دشمن ممالک کو یہ باور کروایا جاسکے کہ اگر پاکستان پر حملہ کیا گیا تو دشمن بھی اپنا وجود کھو دے گا۔

اب آپ سوچ رہے ہوں گے چھوٹا ہتھیار کس جگہ استعمال کرنے کے لیے بنایا گیا ہے اور اس سے کتنی تباہی پھیل سکتی ہے، اصل میں یہ چھوٹے ہتھیار دشمن ملک کی ملٹری بیس یا دوسری فوجی تنصیبات کو تباہ کرنے کے لئے استعمال کیے جا سکتے ہیں، اندازے کے مطابق ایک چھوٹا ہتھیار ایک ملٹری بیس کو تباہ کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

Share This

About yasir

Check Also

کیا واقعی جنرل ضیاء الحق امریکی آلہ کار تھے؟

پاکستان میں آج بھی ایسے لوگوں کی کمی نہیں جو جنرل ضیاء الحق کو امریکی …