Home / Pakistan Air Force / پاک فضائیہ کا وہ پائلٹ جو اسرائیلی ایجنٹ تھا – کیسے پکڑا گیا

پاک فضائیہ کا وہ پائلٹ جو اسرائیلی ایجنٹ تھا – کیسے پکڑا گیا

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) آئی ایس آئی کے میجر (ر) عامر نے بھارت اور اسرائیل کی سازش کو کس طرح بے نقاب کیا،
اس بارے میں انہوں نے کہا کہ اس وقت میں آئی ایس آئی اسلام آباد میں سٹیشن چیف تھا۔
اس وقت اسرائیل نے پاک فضائیہ کے ایک بھگوڑے پائلٹ کو پاکستان کے راز نکلوانے کے لیے استعمال کیا۔ جب میجر (ر) عامر کو اس بات کا پتہ چلا تو انہوں نے اس کی نگرانی شروع کر دی’   اور اس سے ملاقات میں اپنے آپ کو ایک پختون قوم پرست ظاہر کیا، ان دنوں ناراض پختونوں کی ایک
خبر چل رہی تھی اسی وجہ سے میجر (ر) عامر نے اسے اپنا نام سعید خان بتایا۔ اسرائیلی ایجنسی نے پاک فضائیہ کے اس افسرکو برطانیہ کے ایک ڈانسنگ کلب سے اٹھایا اور اسے تل ابیب لے گئے، جہاں اس کی برین واشنگ کی گئی اور اسے پاکستان میں پاکستان مخالف کارروائیوں کے لیے لانچ کیا گیا۔

میجر (ر) محمد عامر نے یہ سارا واقعہ سناتے ہوئے بتایا کہ ان دنوں وہ ایک کتاب پڑھ رہے تھے جو موسادکے ایک سابق چیف نے لکھی تھی اس کتاب میں ذکر آیا کہ چاڈ میں جب ہم نے آپریشن کیا تو چونکہ وہاں ہمارا سفارتخانہ نہیں تھا تو ہم نے ارجنٹائن کے سفارتخانے کواستعمال کیا۔
میجر (ر) عامر نے کہاکہ یہ بات پڑھنے کے بعد میرے ذہن میں یہ بات آئی کہ ان کا تو پاکستان میں بھی کوئی سفارتخانہ نہیں ہے کہیں وہ یہاں پر توکوئی ایسا ہی کام نہیں کر رہے،
میں نے جب ارجنٹائن کے سفارتخانے سے جو اسلام آباد میں تھا معلوم کیا تو وہاں دو ڈپلومیٹ تھے ایک سفیر تھا اور دوسرا فرسٹ سیکرٹری تھا۔ فرسٹ سیکرٹری کا نام لوسٹن تھا،میں نے اس پر نظر رکھنا شروع کر دی، ایک دن لوسٹن اڈیالہ جیل گیا وہاں سے میں نے معلومات کیں تو پتا چلا کہ وہ یہاں پر ایک ائیرفورس کے پائلٹ سے ملا تھا’جس کا کورٹ مارشل ہوا تھا۔ لوسٹن یہودی تھا اور امریکی سفارتخانے میں بطور دفاعی اتاشی بھی کام کرتا تھا، اس طرح ایک کڑی مجھے مل گئی جب پائلٹ رہا ہوکرجیل سے باہر آیا تو میں نے اس کے پیچھے ایک آدمی کولگا دیا جس نے اسے میرے بارے میں بتایاکہ یہ ایک پختون ہے، فوج سے ناراض ہے۔

میجر (ر) عامر نے کہا کہ میں نے دوسال اس کے ساتھ کام کیا اور وطن عزیزکے خلاف اسرائیل اور بھارت کا پلان بے نقاب کر دیا۔
دوسری طرف سابق آئی ایس آئی افسر اور دفاعی تجزیہ کار میجر (ر) محمد عامر نے جیو نیوز کے پروگرام ’’جرگہ‘‘ سینئر صحافی سلیم صافی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کہ سول ملٹری تناؤ کسی کی بالادستی کا نہیں،دائمی بدگمانی کا معاملہ ہے،اس بدگمانی کا حل سول ملٹری قیادت کا اپنی ذات سے بالاتر ہو کر مل بیٹھنا ہے، آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ مخلص آدمی ہیں،انشاء اللہ وہ پاکستان اور افغانستان کو امن دے جائیں گے، ٹرمپ کے پالیسی بیان کے بعد پاکستان تنہائی سے نکل آیا اور پہلی بار دو سپرپاورز ہمارے ساتھ کھڑی ہوگئی ہیں.

Share This

About yasir

Check Also

وہ وقت جب پاکستانی فضائیہ کے میراج طیاروں کو امریکی نہیں پکڑ سکے

پاکستان ائیر فورس کے جنگجو ہوابازوں کو ہدف دیا گیا کہ انہیں بغیر کوئی سراغ …