Home / International / نیو ورلڈ آرڈر کیا ہے اور ہمارے لیئے کتنا مہلک ہے

نیو ورلڈ آرڈر کیا ہے اور ہمارے لیئے کتنا مہلک ہے

نیو ورلڈ آرڈر
1992 میں نیو ورلڈ آرڈر کے نام سے یہودی فنکاروں کے دنیا میں ایک نیا نظام متعارف کرایا ۔، اور جس کی وجہ سے انتہائی تیزی سے زندگی کے ہر شعبے میں تبدیلی آئی ۔

لوگوں کی طرز زندگی کو نئے مذہب کے سانچے میں ڈھالنا عالمی اداروں کا ہدف تھا۔لوگوں کا پہناوا پہننے کے اوقات،سونا جاگنا، طرز رہائش، شادی کب ہونی چاہیے بچے کتنے ہوں خواہشات میں اضافہ کاروبار طورطریقے ان تمام باتوں میں لوگوں کو کھینچ کراس نئے مذہب میں داخل کیاگیا۔

یہودی اداروں کی تیار کردہ مشروبات مثلا پیپسی ،کوک اور منرل واٹر ۔ ان کا استعمال نئے مذہب میں لازم قرار پایا ہے۔ یہ میڈیا کی طاقت ہے جودنیا بھر کے لوگوں کو سحر میں لے رہی ہے۔ یہاں تک کہ غیر یہودی اقوام کو۔۔پلانا، یا جراثیمی ہتھیاروں والا پانی پلانا لکھا جاچکا ہے۔ اس کی زندہ مثال پولیو کے قطرے اور خسرہ کے ٹیکےہیں ۔

خاندانی زندگی ختم کردی جائے جائے گی ۔ جس طرح آج بچوں کوچھوٹی عمر میں پلے گروپ میں بھیج دیاجاتا ہے۔خواتین کو آزادی نسلوں کی تحریکوں کے ذریعے ذلیل کیا جائیگا۔ خواتین کو گھروں سے نکالا جائے گا تاکہ جنسی آزادی پروان چڑھے۔

٭جنسی اختلاط پر مبنی لٹریچر اور فلموں کوفروغ دیاجائیگا ۔

٭ ذہنی قوت سلب کرنے والی ادویات کھانوں یا پانی کی سپلائی میں لوگوں کی مرضی کے بغیر دی جاسکیں گی ۔ ( منرل واٹر، پیسپی کوک وغیرہ )

٭تمام دنیا کا نظام ہر فرد کے مکمل کوائف کمپیوٹرائز کر کے عالمی حکومت کے کمپیوٹرز میں درج ہونگی ۔ ( نادرا نے دجال کا یہ کام بالکل آسان کردیاہے)

٭ موجودہ دنیا کو ایک عالمی گاؤں (Global Village ) بنانے کی جو کوشش کی جارہی ہے اسی کا مقصد بھی یہی ہے کہ سب نظام ایک عالمی قوت کے ہاتھوں میں سونپ دیاجائے۔ ایک آنکھ (دجال کی آنکھ ) سے دیکھاجائے۔
Dajjal In Coming

برین واشنگ :

ٹی وی کےا ثرات کا تجزیہ کرتے ہوئے برین واشنگ کے ایک ماہر نے کہا کہ ٹی وی کی صورت میں انسانی دل ودماغ اور جذبات پر مکمل کنٹرول کرنے کا ایک زبردست وسیلہ ہمارے ہاتھ آگیا ہے ۔ یہ آپ کے سامنے ایسی چیزیں پیش کرتا ہے کہ آپ چاہیں یا نہ چاہیں ان کو پسند کرنے پر خودکو مجبور پائیں گے ۔ دنیا کے پچاس فیصد لوگوں نے ٹی وی کی وجہ سے کھانے پینے، سونے ، لکھنے پڑھنے اور کام کے پروگرام بدل دیئے ہیں۔

معدے اور گھٹنوں کو تباہ کرنے کے لیے لوگوں سے سرسوں کا تیل چھڑوا کر کیمیکل سے تیار بناسپتی گھی اور تیل کی ایجادا، جنسی طور پر کمزور کرنے کے لیے آیوڈین ملا نمک ، آئس کریم ،چاکلیٹ، گردے فیل کرنے کے لیے یہودی کمپنیوں کی ڈبہ بند غذائی مواد۔ کیمیکل سے بھرے شیمپو، فارمی انڈے اور مرغی غرض کہ سب انسانی زندگی کا حصہ بن چکی ہیں۔

یہاں تک کہ دروازوں کے پردے، پردوں کے ساتھ لگی گھنٹی ۔ مختلف جادوئی نشانات ،مختلف قسم کے کارٹون ، گھر میں رکھے پودے اپنے گھر کی برکت وسکون کو تباہ کررہے ہیں۔

خاندانی منصوبہ بندی :

مسلمانوں کی بڑھتی ہوئی آبادی دجال کے لوگوں کے لیے یقیناً پریشانی کا باعث ہے ۔چنانچہ یہودی سائنسدانوں مسلمانوں کی آبادی کم کرنے کے لیے مختلف منصوبوں پر عمل پیرا ہیں۔ انھوں نے بچوں کی کھانے پینے کی اشیاء میں ایسے کیمیاوی اجزاء شامل کیے جس سے خاندانی منصوبہ بندی کے نتائج حاصل کرنے میں آسانی ہوتی مثلا آیوڈین ملا نمک ،بناسپتی گھی ،کوکنگ آئل ، بچوں کے ڈبے بند دودھ ،مشروبات ،کولڈرنک وغیرہ ۔

پولیو کے قطرے :

پولیو مہم کے بارے میں اگر غور کیاجائے کہ جو چیز ہاکستان میں نہ ہونے کے برابر ہے دجالی اداروں کی جانب سے اسی پر اربوں ڈالر خرچ کئے جارہے ہیں۔ یہ کیسی ہمدردی ہے ۔

تحقیق کے بعد یہ بات منظر عام پر آتی ہے کہ خسرہ وپوولیو کی ویکسن میں ایڈز وکینسرکے جراثیم شامل ہیں۔

وسطی افریقہ کے 140000 باشندوں کو خسرہ سے بچاؤ کے ٹیکے لگائے گئے۔ ماہرین کی تحقیق کے بعد 50 ماہرین نےا علان کیاتھا کہ جنوبی افریقہ کے 75 ملین لوگ اگلے پانچ برسوں میں ایڈز سے متاثر ہوجائیں گے ۔

پانی پرعالم جنگ :  دجال کی کوشش یہ ہے کہ اس کے آنے سے پہلے تمام دنیا کھانے پینے میں اس کی محتاج ہوجائے ۔

عالم اسلام کے خلاف پانی کے محاذ پر یہ جنگ ولڈ بینک لڑرہا ہے۔ اس نے ترکی ، اسرائیل اور بھارت کو دریاؤں پر بڑے بڑے ڈیم بنانےکے لیے پیسے فراہم کئے ۔
Wars For Water

دجال کی آمد سے پہلے :

ایک بہت روشن دم دار ستارہ ظاہرہوگا اس کی وجہ سے زمین میں حیرت انگیز تبدیلیاں رونما ہونگی ۔ زلزے، اتش فشاں اور موسمیاتی تبدیلیاں ہونگی ۔نیز خشک سالی وقحط ہوگا ، معاشرتی بے چینی اورعدم استحکام دجال کوآنے میں مددگار ثابت ہوگا۔

دجال کوئی نقصان نہیں پہنچاسکتا :

نبی کریم ﷺ نے فرمایا” بیشک تمہارے بعد ایک جھوٹا گمراہ کرنے والا ہوگا۔اس کا سر کےبال پیچھے سے بندھے ہوئے ہونگے ۔ وہ کہے گا میں تمہارا رب ہوں تو جس نے کہا کہ تو نے جھوٹ بولا تو ہمارا رب نہیں ہے بلکہ ہمارارب تو اللہ ہے اسی پر ہم نے بھروسہ کیاہے اوراس کی جانب متوجہ ہوئے ہیں اورہم تجھ سے اللہ کی پناہ چاہتے ہیں ۔ تو ایسے شخص پر دجال کا کوئی بس نہیں چل سکے گا۔”

جودجال کے یا اس کے لوگوں کے ہاتھوں شہید ہونگے ان کی قبریں تاریک اور گھٹا ٹوپراتوں میں چمک رہی ہونگی” ( الفتین نعیم ابن حماد )

نبی کریمﷺ نے فرمایا “قیامت اس وقت تک نہیں آئے گی جب تک مسلمان یہودیوں کے جنگ نہ کریں مسلمان ان کو قتل کرینگے یہاں تک کہ یہودی پتھر اور درختوں کے پیچھےچھپتے پھرینگے۔ ہر پتھر اوردرخت بھی بول اٹھے گا اے مسلمانو! اے اللہ کے بندے ! یہ یہودی میرے پیچھے چھپا ہے آؤاور اس کو قتل کردو۔ البتہ غرقہ کا درخت نہیں بولے گا کیونکہ وہ یہودیوں کا درخت ہے۔”

غرقہ کا درخت کانٹے دار جھاڑی نماہوتاہے جو کہ بنجر زمین میں اگتاہے ۔ یہودی دنیا بھر میں اسی درخت کو بڑے پیمانے پر لگارہے ہیں۔

ہماری منزل :۔ ایک مسلمان کی منزل اللہ اوررسول کی محبت زندہ ہے تو شیطان کی سازشوں کا مقابلہ کریں صرف اور صرف اپنے گھر کوجہاں تک ہوسکے یہودیوں کی سازشوں سے پاک کرنے کی کوشش کریں ۔اپنی نسلوں کو برباد ہونے سے بچائیں اور شیطان کی خطرناک سازشوں کو ناکام بنائیں تاکہ اپنے رب کے سامنے شرمندگی نہ ہو ۔اللہ تعالیٰ نے مسلمانوں سے فتح کا وعدہ کیاہے اور بے شک وہ اپنا وعدہ ضرور پورا کرتاہے ۔
Dajjal Is Coming fitna dajjal

امام مہدی کا نزول:

٭ علی بن عبداللہ بن عباس رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں مہدی اس وقت تک نہ آئٰیں گے جب تک سورج کے ساتھ ایک نشانی طلوع نہ ہو۔

٭ ابن سیرین فرماتے ہیں کہ مہدی کا خروج اسی وقت ہوگا جب ہر نوسے سات قتل ہوجائیں۔

Facebook Comments
Share This

About yasir

Check Also

بھارت کی خفیہ جنگی تیاری یا پھرخوف کا سدباب

بھارتی اخبار ٹائمز آف انڈیا نے یہ خبر دی ہے کہ بھارت بڑی تعداد میں …

error: Content is protected !!