Home / Pakistan Air Force / پاکستان اور اسرائیل کا نفرت بھرا رشتہ

پاکستان اور اسرائیل کا نفرت بھرا رشتہ

پاکستان اور اسرائیل تقریبا ایک ھی وقت میں وجود میں آئے اسرائیل نے پاکستان کو اسرائیل کو سرکاری طور پر تسلیم کرنے کے لیے اربوں ڈالر کی پیشکش کی مگر اس وقت کے پاکستان کے وزیر اعظم لیاقت علی خان نے اس پیشکش کو مسترد کردیا اور زبردست جواب دیا “جنٹلمین ہماری روح برائے فروخت نہیں” آج تک وہی جرأت باقی ہے۔

ڈیوڈ بن گوریان جو کہ ایک یہودی تھا نے اپنی قوم کو پاکستان کی طرف سے خبردار رہنے کو کہا تھا، عربوں کے دوست ہمارے لیے زیادہ خطرناک ہیں 1947 سے لے کر آج تک پاکستان اور اسرائیل مسلسل حالت جنگ میں ہیں، اسرائیل ہم پر بھارت کے ذریعے حملہ آور ہے اور ہم ان پر عربوں کے ذریعے، یہاں تک کہ ہم  اسرائیلی ایئر فورس کو بھی مار گرا چکے ہیں۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ پاکستانی ایر فورس واحد ائر فورس ہے جس نے بھارتی روسی اور اسرائیلی جہازوں کو حقیقی جنگوں میں مار گرایا ہوا ہے۔ 80 کی دہائی میں روسی جہازوں کو مار گرایا گیا تھا، جبکہ کئی اسرائیلی جہازوں کو سنہ 67 اور سنہ 73 کی جنگوں میں مار گرایا گیا،جبکہ اسرائیل کے خلاف کوئی بھی پاکستانی طیارہ تباہ نہیں ہوا، اور یہ تب کی بات ہےجب پاکستانی ائیرفورس کو عرب اقوام کی مدد کے لئے بلایا گیا تھا۔

1984 میں جب اسرائیل اس سے پہلے 1981 میں عراقی ایٹمی ری ایکٹر کو تباہ کر چکا تھا تو یہودی ریاست نے بھارت کی مدد سے پاکستان کے کہوٹہ میں واقع ایٹمی ری ایکٹر پر حملہ کرنے کی سازش کی مگر پاکستان کا رویہ دیکھ کر ہمت نہیں کر پائے۔
Pakistan Air Force PAF

اگر اسرائیل کو پاکستان کے وجود سے کوئی خطرہ محسوس نہ ہوتا تو کبھی بھی اسرائیل اتنا بڑا قدم اٹھانے کا نا سوچتا، اسرائیل جانتا ہے کہ اس کا خاتمہ اگر ممکن ہے تو صرف اور صرف وہ ملک پاکستان ہے جس کی فوج اسرائیل کے لیے خطرہ ہے۔

1984 میں جب اسرائیل کہوٹہ پر حملہ کرنے کے لیے پوری طرح سے تیار تھا تو ادھر پاکستان کے ایف 16 کے پائلٹس یک طرفہ حملہ کرنے کے لیے تیار کھڑے تھے، ہر پائلٹ اپنی دلی خواہش پر نواگا کے صحرا میں موجود ڈیمونا ری ایکٹر کو تباہ کرنے کے لئے تیار تھا۔ یہ جذبہ آج بھی پاکستان کے پائلٹس میں موجود ہے۔

حتیٰ کہ آج بھی اسرائیل پاکستان کے خلاف انڈیا کا سب سے بڑا پارٹنر ہے، کارگل کی جنگ میں اس نے بھارت کی مدد کی لائن آف کنٹرول پر موجود تمام ریڈار اسرائیلی ہیں، اسرائیل کے آرمی چیف نے کشمیر کا دورہ کیا اور بھارت کشمیر کی تحریک آزادی کو کچلنے کے لیے مشورے دیئے، تمام ڈرونز جو کہ انڈیا استعمال کرتا آیا ہے وہ اسرائیلی ہیں، پاکستان ان کا مشترکہ حریف ہے۔

Facebook Comments
Share This

About yasir

Check Also

وہ وقت جب پاکستانی فضائیہ کے میراج طیاروں کو امریکی نہیں پکڑ سکے

پاکستان ائیر فورس کے جنگجو ہوابازوں کو ہدف دیا گیا کہ انہیں بغیر کوئی سراغ …

error: Content is protected !!