Home / Pakistan Army / پاک آرمی کے زیر استعمال رائفلوں کیلئے اہم اقدامات

پاک آرمی کے زیر استعمال رائفلوں کیلئے اہم اقدامات

مشین گنوں کو ملٹری وہاں استعمال کرتی ہے جہاں دشمن کے مورچے ہوں یا کم وقت میں گولیوں کی برسات کر کے دشمن کا خاتمہ کرنا ہو، دشمن کے قافلے کو منٹوں میں ختم کرنا ہو یا پھر دشمن کی پیش قدمی کو روکنا ہو، اس کے علاوہ کئی جگہوں پر مشین گنوں کی ضرورت پڑتی ہے،
Pakistan Modern Weapons

پاکستان آرمی نے اپنی مشین گنوں پر ٹیلیسکوپ لگا کر انہیں انتہائی کارآمد بنا دیا ہے، جیسا کہ ان مشین گنوں کی گولیوں کی رینج کئی سو میٹر تک ہوتی ہے مگر اتنی دور تک انسانی آنکھ نہیں دیکھ سکتی، مگر پاک آرمی نے ان مشین گنوں پر ٹیلیسکوپ لگا کر انہیں اس قدر کار آمد بنا دیا ہے کہ کئی سو میٹر دور سے دشمن کو پاک فوج کا سپاہی ٹیلیسکوپ کی مدد سے نہ صرف دیکھ سکتا ہے بلکہ دشمن پر فائر کھول سکتا ہے۔

اس کے علاوہ کسی خاص ٹارگٹ کو گرانے کے لیے پاک آرمی کے پاس مختلف قسم کی سنائپرز بھی موجود ہیں, سنائپر رائفل مختلف آپریشنز میں استعمال ہوتی ہے اور اس کی مانگ بھی بہت ہے،یہ ایک مہنگی ترین رائفل ہوتی ہے، فوج کے ہر سپاہی کے پاس ایک آٹومیٹک/ سیمی آٹومیٹک رائفل موجود ہوتی ہے۔ پاکستان کی آرمی کے جوانوں کے پاس زیادہ تر پاکستان کی بنائی ہوئی جی تھری رائفل موجود ہوتی ہے۔

جی تھری رائفل کی گولی کی رینج تقریبا پانچ سو میٹر تک ہوتی ہے جو کہ ایک نارمل سنائپر کی گولی کی رینج جتنی ہے، پاکستان آرمی نے ضرورت کے تحت کچھ جی تھری رائفلز پر بھی ٹیلیسکوپ نسب کر رکھی ہے۔ یوں ایک سپاہی کو ایک وقت میں دو موڈز میں استعمال ہونے والی رائفل سے لیس کیا گیا ہے۔
Pakistan Defence

امید ہے آپ کو ہمارا آرٹیکل پسند آیا ہوگا, اگر آپ اسی طرح پاکستان آرمی کے ہتھیاروں کے بارے میں مزید معلومات جاننا چاہتے ہیں تو آپ ہمارے ۔۔۔
فیس بک پیج ” Advanced Warfare” کو ضرور لائک کیجئے۔

Facebook Comments
Share This

About yasir

Check Also

لال مسجد آپریشن کیوں ہوا تھا – کچھ تلخ حقائق

اسلامی جمہوریہ پاکستان میں لال مسجد اور قبائیلی علاقوں میں آپریشن نے پاک آرمی کو …

error: Content is protected !!